امریکی عدالت نے ڈونلڈ ٹرمپ کیخلاف ایسا فیصلہ دیدیا کہ خود امریکی صدر بھی ہکا بکا رہ گئے

واشنگٹن(این این آئی)امریکی عدالت کے جج نے امریکی صدر کے خلاف فیصلہ دیا ہے کہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ سوشل میڈیا پر ناقدین کو بلاک نہیں کرسکتے۔ یہ امریکی آئین کی پہلی ترمیم کے تحت اظہاررائے کی آزادی کے حق کی خلاف ورزی ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق ٹوئٹر پرکچھ صارفین کی جانب سے صدر ٹرمپ پر تنقیدی ٹوئٹ کیے گئے ، جس کے جواب میں صدر ٹرمپ نے اْن صارفین کو بلاک کردیا تھا۔جس کے بعد بلاک کیے جانے والے صارفین نے صدر ٹرمپ پر مقدمہ کردیا۔سماعت کے دوران جج نے کہا کہ ٹرمپ کے ٹوئٹس عوامی حیثیت رکھتے ہیں۔دوسری طرف محکمہ
انصاف کی جانب سے یہ اعتراض اٹھایا گیا کہ اس فیصلے سے آئین کی پہلی ترمیم کے تحت خود صدر ٹرمپ کے حقوق متاثر ہوئے ہیں جس کے تحت انہیں یہ اختیار ہے کہ جن لوگوں سے وہ بات نہیں کرنا چاہتے انہیں بلاک کردیں مگر جج نے یہ اعتراض بھی مسترد کردیا۔

یہ خبر جس ویب سائٹ سے لی گئی ہے اس کا لنک یہاں ہے. شکریہ

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.