عمران خان کی محنت رنگ لے آ ئی ، خیبر پختونخوا حکومت کا تعلیمی میدان میں ایسا کارنامہ کہ گڈ گورننس کے دعویدار منہ دیکھتے رہ گئے

عمران خان کی محنت رنگ لے آ ئی ، خیبر پختونخوا حکومت کا تعلیمی میدان میں ایسا کارنامہ کہ گڈ گورننس کے دعویدار منہ دیکھتے رہ گئے

ہری پور(ویب ڈیسک)پاکستان تحریک انصاف کے رہنماء و سابق صوبائی وزیر برائے مواصلات وتعمیرات یوسف ایوب خان نے کہاکہ خیبرپختونخوامیں تحریک انصاف کی تعلیمی ایمرجنسی کے نفاذسے اتنی بڑی تبدیلی آئی ہے کہ سرکاری تعلیمی ادارے جہاں کچھ عرصہ قبل تک بچوں کو داخل کروانامعیوب یاباعث شرم گرداناجاتاتھا اب ان کی تعلیمی ترقی اوراعلیٰ تعلیمی معیارکی یہ حالت ہے کہ ،

ممبران اسمبلی نے بھی اپنے بچے نجی شعبہ سے نکلواکر سرکاری تعلیمی اداروں میں داخل کرواناشروع کر دیے ہیں جب کہ صوبائی حکومت کی انقلابی تعلیمی اصلاحات کے باعث نجی شعبہ سے سرکاری تعلیمی اداروں میں آنے والے بچوں کی تعدادایک لاکھ اوراکسٹھ ہزار سے بھی تجاوزکر گئی ہے جو والدین کا صوبائی حکومت کی قابل تحسین تعلیمی پالیسیوں پر مکمل اعتمادکابین ثبوت ہے ، نجی شعبہ میں قائم تعلیمی ادارے اربوں کمارہے ہیں مگران کی ہم نصابی سرگرمیاں نظرنہیں آتیں اورسرکاری شعبہ ان پر بازی لے گیا ہے، گورنمنٹ سینیٹینیل ماڈل ہائر سکینڈری سکول نمبر1ہری پور میں محکمہ تعلیم خیبرپختونخوا کے زیر اہتمام منعقدہ گورنمنٹ ہائی و ہائرسکینڈری سکولز ٹورنامنٹ2017کے صوبائی مقابلوں کی تقریب تقسیم انعامات سے بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے یوسف ایوب خان نے کہا کہ باصلاحیت وزیر تعلیم عاطف خان نے مثالی تعلیمی پالیسیوں اورانقلابی اصلاحات سے محکمہ تعلیم خیبرپختونخواکا پوراانفراسٹرکچرہی تبدیل کر کے رکھ دیا ہے جس سے صحیح معنوں میں تحریک انصاف کی میرٹ و انصاف پالیسی خیبرپختونخواکے عوام کے دلوں پر راج کرتی نظرآئی ہے لوگ خوش ہیں کہ ان کے کام بغیرسفارش کے اورمیرٹ پر ہو رہے ہیں جب کہ ہزاروں بھرتیاں صرف اورصرف میرٹ کی بنیادپر ہوئی ہیں اوراب تبادلوں تقرریوں کے لیے پی ٹی آئی کے ممبران اسمبلی کے پاس کوئی نہیں آتاجو کسی بھی سیاسی پارٹی کے دوراقتدارکی قابل فخراورقابل تقلیدمثال ہے ۔

انھوں نے کہا کہ پی ٹی آئی نے صوبے کے تعلیمی بجٹ میں114فیصدکاریکارڈاضافہ کیا ہے جس کی اس سے پہلے کوئی مثال نہیں ملتی جب کہ پاکستان کے تعلیمی اعتبارسے سرفہرست دس اضلاع میں سے 9کا تعلق خیبرپختونخواسے ہے جو پی ٹی آئی کی تعلیمی ایمرجنسی کا ثمرہے دوسری طرف سرکاری تعلیمی اداروں میں بنیادی سہولیات کی فراہمی اورمعیارتعلیم کی بہتری سے عوام کا سرکاری تعلیمی اداروں پر اعتماد بحال ہواہے اورلوگوں نے اپنے بچے دھڑادھڑسرکاری سکولوں میں داخل کرواناشروع کر دیے ہیں۔یوسف ایوب خان نے کہا کہ یہ بھی صوبائی حکومت کی بہترین تعلیمی پالیسیوں اور اصلاحات کاثمر ہے کہ مانسہرہ،کوہستان اورچترال جیسے پسماندہ علاقوں کے ہونہار طلبہ بھی تعلیمی سہولیات میسرآنے پر صوبائی مقابلوں میں بڑے بڑے سکولوں کو پیچھے چھوڑگئے ہیں جس پر ان علاقوں کے منتخب نمائندوں،سکولز سربراہان اوراساتذہ اکرام کے علاوہ والدین اورطلبہ بھی مبارکباد اورخراج تحسین کے مستحق ہیں۔انھوں نے کہا کہ صوبائی حکومت محکمہ تعلیم میں جس بڑے پیمانے پر تبدیلی لائی ہے اس کا مقابلہ اورکوئی صوبائی محکمہ نہیں کر سکتا جس پر صوبائی وزیر تعلیم عاطف خان اوروزیر اعلیٰ پرویز خان خٹک اوران کے دیگر رفقاء کار دلی مبارکباد کے مستحق ہیں۔مہمان خصوصی یوسف ایوب خان نے صدر تقریب ڈائریکٹررفیق خٹک اورصوبائی ٹورنامنٹ کمیٹی کے اراکین میں سوینئیرزتقسیم کرنے کے علاوہ پوزیشن ہولڈرزصوبائی چیمپئین سکولوں کے طلبہ،اساتذہ اور سربراہان میں انعامات بھی تقسیم کیے اوران کی شاندارکارکردگی کو بے حد سراہا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.