سائیکلوں کی دکان والا اسحاق ڈار پاکستان کا وزیر خزانہ کیسے بنا ؟ انکشاف ہو گیا

سائیکلوں کی دکان والا اسحاق ڈار پاکستان کا وزیر خزانہ کیسے بنا ؟ انکشاف ہو گیا

اسلام آباد(ویب ڈیسک) پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان کا کہنا ہے کہ سابق وزیرخزانہ اسحاق ڈار، نواز شریف کے فرنٹ مین ہیں۔ اسلام آباد میں پریس کانفرنس کے دوران عمران خان نے کہا کہ ‘اسحاق ڈار پاکستان اور دبئی میں نواز شریف کے فرنٹ مین ہیں، جنہیں ملک سے نکالنے کے لیے شاہد خاقان عباسی کا جہاز دیا گیا، جبکہ امریکا میں ان کا فرنٹ مین سعید شیخ ہے’۔

عمران خان نے پریس کانفرنس کے آغاز میں کہا کہ، ‘اسحاق ڈار کی لاہور میں سائیکل کی دکان تھی اور پھر وہ نواز شریف اور شہباز شریف سے ملے’۔ پی ٹی آئی چیئرمین کا کہنا تھا کہ اسحاق ڈار کی ایک کمپنی ایچ ٹی ایس کے دبئی میں 52 ولاز ہیں اور ترکی، عمان، سوئٹزرلینڈ اور انگلینڈ سے بھی اسحاق ڈار کی کمپنی میں پیسے آرہےہیں۔ ساتھ ہی انہوں نے کہا کہ کمپنی میں دیگر ملکوں سے بھی پیسے آرہے ہیں، اس کا مطلب یہ ہے کہ دیگر ملکوں میں بھی کمپنیاں ہیں۔ عمران خان نے اسحاق ڈار کے استعفیٰ کے بعد نئے وزیر خزانہ کی تقرری نہ ہونے پر بھی تنقید کی اور کہا کہ حکومت نے نیا وزیر خزانہ نہیں بنایا بلکہ ایڈوائزر لگادیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ایل این جی کا کنٹریکٹ 15 ارب ڈالر کا ہے اور کہا جارہا ہے کہ ایل این جی کنٹریکٹ کنفیڈنشل کنٹریکٹ ہے۔ ساتھ ہی انہوں نے سوال کیا، ‘کیا پبلک کے پیسے پر بھی کوئی کنفیڈنشل کنٹریکٹ ہوتا ہے؟ عمران خان کا کہنا تھا کہ ‘یہ ایک پورا مافیا ہے اور اب چیزیں سامنے آرہی ہیں’۔ واضح رہے کہ چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان نے گذشتہ روز سماجی رابطے کی سائٹ ٹوئٹر پر کہا تھا کہ وہ آج پریس کانفرنس میں بتائیں گے کہ کس طرح شریف خاندان نے دولت لوٹی اور بیرون ملک منتقل کی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.