سپیکر ایاز صادق نے اسمبلیاں ٹوٹنے کا بیان کیوں دیا تھا؟؟؟کیونکہ ان کو استعفوں کے اس چاٹ کا اندازہ ہوگیا تھا ۔۔۔حامد میر نے اندر کی کہانی بیان کر ڈالی

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) ملک کے معروف صحافی اور تجزیہ کار حامد میر کا کہنا ہے کہ سپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق نے جو اسمبلیوں کے ٹوٹنے کا خدشہ ظاہر کیا ہے کہ اس کے پیچھے ایک بڑی اہم وجہ ہے اور وہ وجہ یہ ہے کہ وہ تمام اراکین قومی اسمبلی اور تما م پارلیمانی جماعتوں کے ساتھ رابطے میں رہتے ہیں۔ اور انھوںنے ضرور حالیہ دنوں میں ایک چیز کا مشاہدہ کیا ہے ۔اور وہ چیز یہ ہے کہ قومی اسمبلی میں اپوزیشن جماعتیں اور خود حکومتی جماعت کے کچھ ناراض اراکین اسمبلی اگر مستعفی ہو جاتے ہیں تو جو نمبرز گیم بنے گی وہ کچھ اس طرح ہو گی۔


حامد میر کا کہنا ہے کہ اگر قومی اسمبلی کے 031 ارکان مستعفی ہونے کا سوچ رہے ہیں تو اسمبلی خود بخود ٹوٹ جائے گی ۔اور اگر خیبر پختونخوا اور سندھ اسمبلی بھی تحلیل کر دی جائے گی تو ملک میں نئے الیکشن کے علاوہ کوئی چارہ نہیں بچے گا

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.