کراچی میں ایک نئی طرز کا نشہ نوجوان نسل میں زہر گھولنے لگا،50فیصد لڑکیاں عادی

کراچی کی ڈانس پارٹیز میں ایک نئی طرز کا نشہ نوجوان نسل میں زہر گھولنے لگا،50فیصد لڑکیاں عادی ہو گئیں۔ایس پی صدر کا کہنا ہے کہ ایکسٹسی نامی نشہ پارٹی ڈرگ ہے جسے کھا کر نیند نہیں آتی اور عادی افراد وسوسوں کا شکار ہو جاتے ہیں،ایکسٹسی کا نشہ بیچنے والوں کا خطرناک گروہ پکڑا گیا ہے۔تفصیلات کے مطابق کراچی میں ایک نئی طرز کا نشہ نوجوان نسل میں زہر گھولنے لگا۔

ایکسٹسی نامی نشہ پارٹی ڈرگ ہے جو کراچی میں ہونے والی ڈانس پارٹیز میں پیش کیا جاتا ہے۔ڈانس پارٹیز منعقد کروانے کے پیچھے بڑے بڑے گینگز ہوتے ہیں جو سوشل میڈیا پر نوجوان نسل کو ڈانس پارٹیز میں شرکت کی دعوت دیتے ہیں اور وہاں انکو نشے کا عادی بناتے ہیں ایس پی صدر کراچی کا کہنا تھا کہ ایکسٹسی ایک پارٹی ڈرگ ہے جسے کھا کر انسان کو نیند نہیں آتی اور وہ وسوسوں کا شکار ہوجاتا ہے۔اس نشے کے عادی افراد میں 50 فیصد لڑکیاں شامل ہیں۔انکا کہنا تھا کہ ایکسٹسی بیچنے والوں کا ایک گروہ گرفتار کر لیا گیا ہے۔یہ ایک مکمل مافیا ہے جو نشہ کروانے کے بعد لڑکیوں کی ویڈیوز بھی بناتا ہے اور بعد میں اس ویڈیو کو اپنے مذموم مقاصد کے لیے استعمال بھی کرتا ہے۔
یہ خبر جس ویب سائٹ سے لی گئی ہے اس کا لنک یہاں ہے. شکریہ

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.