سی پیک پر کام کرنیوالے چینی انجینئرز نے پولیس کی پھینٹی لگا دی ،بات صرف یہی تک نہیں رہی بلکہ چینیوں نے ایسا کام کر ڈالا کہ پاکستانی پولیس اپنے ہی ملک میں بے بس ہو کر رہ گئی

کبیروالا، خانیوال(سی پی پی) سی پیک پر کام کرنے والے چینی انجینئرز کا پولیس سے جھگڑا، نوبت ہاتھ پائی تک جاپہنچی۔نجی ٹی وی کے مطابق کبیروالا میں سی پیک میں شامل ایم فور موٹروے نور پورسائٹ پر پولیس اور چینی باشندوں میں جھگڑا ہوگیا۔ چینی شہریوں نے بغیر سیکورٹی کیمپ سے باہر جانے کی کوشش کی تو پولیس نے ان کی حفاظت کے پہلو سے انہیں روکا۔ اس پر چینی باشندے برہم ہوگئے۔اس دوران غیر ملکیوں اور پولیس میں ہاتھا پائی ہوئی۔ پراجیکٹ انجینئرڈینی نے

پولیس اسکواڈ کے انچارج لطیف کو کرسی اٹھا کر ماردی جب کہ ایک چینی باشندہ پولیس موبائل پر چڑھ کر کھڑا ہوگیا۔ چینی ملازمین نے پولیس کیمپ کی بجلی بھی کاٹ دی۔پولیس نے صورتحال کو کنٹرول کرنے کے لیے چینی شہریوں کو کیمپ میں بند کرکے باہر سے تالے لگادیئے۔ اسسٹنٹ کمشنر کبیروالہ اور ڈی ایس پی موقع پر پہنچ گئے اور بات چیت کرکے معاملے کو حل کرنے کی کوشش کی۔ تاہم چینی ملازمین نے مذاکرات سے انکار کردیا،حالات بدستور کشیدہ ہیں۔
یہ خبر جس ویب سائٹ سے لی گئی اس کا لنک یہاں ہے. شکریہ

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.