خادم حسین رضوی پھر میدان میں آگئے ،ایک بار پھر پورا پاکستان جام ، شہر شہر قریہ قریہ دھرنے، تاریخ کا اعلان کر دیا گیا

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )تحریک لبیک یا رسول اللہ نے پاکستان جام کرنے کا اعلان کر دیا۔ تفصیلات کے مطابق تحریک لبیک یا رسول اللہ نے ایک بار پھر پاکستان جام کرنے کا اعلان کر دیا ہے۔ تحریک لبیک یا رسول اللہ کے سرپرست اعلیٰ پیر محمد افضل قادری نے تحریک کے سربراہ علامہ خادم حسین رضوی اور دیگر قائدین کی موجودگی میں اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر یکم اپریلتک حکومت نے مطالبات نہ مانے تو 2اپریل کو ایک بار پھر پاکستان کو جام کر دینگے۔ پیر افضل قادری نے اس موقع پر کہا کہ فیض آباد دھرنا

جس معاہدے کے تحت ختم کیا اس معاہدے کی شقوں پر تاحال عملدرآمد نہیں ہوا اور نہ ہی آرمی چیف کی گارنٹی پوری ہوئی جو کہ پاک فوج کی بدنامی ہے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ یکم اپریل تک فیض آباد دھرنے کی انکوائری رپورٹ پبلک کی جائے اور فیض آباد دھرنے کے شہدا کی ایف آئی آر کاٹی جائے ۔ان کا کہنا تھا کہ حکومت نے وعدہ خلافی کی ،امانت و دیانت کے منبع علامہ خادم حسین رضوی کو بغیر کسی ثبوت کے کرپٹ کہا گیا جبکہ انسداد دہشت گردی کورٹ سے علامہ خادم حسین رضوی کے وارنٹ گرفتاری جا ری کرائے گئے ،فیض آباد دھرنے کے شہدا کی ایف آئی آر نہیں کاٹی گئی کسی کو گرفتار نہیں کیا گیا ،اس کے بجائے حکومت ہم پر حملہ آور ہو گئی ہے ۔انہوں نے کہا کہ ہم نے فیصلہ کیا ہے کہ یکم اپریل تک ہمارے مطالبات پورے نہ کیے گئے تو 2 اپریل کو داتا صاحب کے باہر جمع ہوں گے اور پھر پہلے سے زیادہ شدت کے ساتھ پورا ملک بند کر دیں گے ،ائیرپورٹ ،سڑکوں ،ریلوے ٹریک اور ہر ضلع میں ہر چیز جام کر دیں گے اگر پھر بھی ہمارے مطالبات نہ مانے گئے تو پھر حکومت ہمارے ا گلے لائحہ عمل کیلئے تیار رہے ۔

یہ خبر جس ویب سائٹ سے لی گئی ہے اس کا لنک یہاں ہے. شکریہ

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.